تازہ ترین
Home / اہم خبریں / سٹی وارڈن سینیارٹی اور تنخواہوں کی عدم ادائیگی، کے ایم سی وکیل کو 2 ہفتوں میں جواب داخل کرنے کی ہدایت

سٹی وارڈن سینیارٹی اور تنخواہوں کی عدم ادائیگی، کے ایم سی وکیل کو 2 ہفتوں میں جواب داخل کرنے کی ہدایت

کراچی (نوپ نیوز) پاسبان ڈیمویٹک پارٹی کے چیئرمین الطاف شکور کی ہدایت پر سٹی وارڈن کو سینیارٹی اور تنخواہوں کی عدم ادائیگی کے معاملے پر خرم لاکھانی کے توسط سے سندھ ہائیکورٹ میں دائر کردہ آئینی درخواست نمبر 787/2022 کی سماعت جسٹس نعمت اللہ پھلپوٹو اور جسٹس عدنان الکریم میمن پر مشتمل دو رکنی بینچ نے کی۔ پاسبان کے وکیل خرم لاکھانی ایڈوکیٹ نے عدالت کو بتایا کہ کے ایم سی کے حکام نے ماضی میں دائر کردہ آئینی درخواست 1788/2019 کے نتیجے میں کنٹریکٹ سٹی وارڈن کو ریگولرائز کیا تھا لیکن ان سٹی وارڈنز کو مستقلی کے جاری کردہ لیٹر کنٹریکٹ کا دورانیہ شامل نہیں کیا گیا تھا جبکہ سٹی وارڈن 2007 اور 2009 سے کنٹریکٹ کی بنیادوں پر اپنی ڈیوٹیاں سرانجام دیتے آرہے تھے۔ ان ملازمین کی ریگولرائزیشن میں کنڑیکٹ کا دورانیہ شامل نہ کرکے کے ایم سی حکام نے بدنیتی کا ثبوت دیا ہے جبکہ مستقل ہونے والے سٹی وارڈن کی بقیہ تنخواہیں بھی روکی گئی ہیں۔

مزید پڑھیں: وزیر اعظم شہباز شریف کی وفاقی کابینہ نے حلف اٹھا لیا، کابینہ میں 31 وفاقی وزرا اور 3 وزرائے مملکت شامل
https://www.nopnewstv.com/prime-minister-shahbaz-sharifs

کے ایم سی کے وکیل نے معزز عدالت سے اس معاملے پر جواب طلب کرنے کے لئے چار ہفتے کی مہلت مانگی جس پر پاسبان کے وکیل خرم لاکھانی جانب سے زائد وقت نہ دینے کی استدعا پر معزز عدالت نے کے ایم سی کے وکیل کو دو ہفتے میں جواب داخل کرنے کی ہدایت کی۔ سٹی وارڈن نے پاسبان ڈیموکریٹک پارٹی کے چیئرمین الطاف شکور اور دیگر ذمہ داران کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاسبان نے ہی ہمیں مستقلی کا حق دلوایا اور ہم مظلوم ملازمین کو ایک بار پھر حق دلانے کے لئے عملی جدوجہد کررہی ہے۔

About admin

یہ بھی پڑھیں

متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے سینئر رہنما و رکن قومی اسمبلی اقبال محمد علی انتقال کرگئے

کراچی (رپورٹ: ذیشان حسین) متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کے سینئر رہنما و …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے